گرم فغاں ہے جرس اٹھ کہ گیا قافلہ

گرم فغاں ہے جرس اٹھ کہ گیا قافلہ

وائے وہ رہ رو کہ ہے منتظر راحلہ

تیری طبیعت ہے اور تیرا زمانہ ہے اور

تیرے موافق نہیں خانقہی سلسلہ

دل ہو غلام خرد یا کہ امام خرد

سالک رہ ہوشیار سخت ہے یہ مرحلہ

اس کی خودی ہے ابھی شام و سحر میں اسیر

گردش دوراں کا ہے جس کی زباں پر گلہ

تیرے نفس سے ہوئی آتش گل تیز تر

مرغ چمن ہے یہی تیری نوا کا صلہ

(458) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Garm-e-fughan Hai Jaras UTh Ki Gaya Qafila In Urdu By Famous Poet Allama Iqbal. Garm-e-fughan Hai Jaras UTh Ki Gaya Qafila is written by Allama Iqbal. Enjoy reading Garm-e-fughan Hai Jaras UTh Ki Gaya Qafila Poem on Inspiration for Students, Youth, Girls and Boys by Allama Iqbal. Free Dowlonad Garm-e-fughan Hai Jaras UTh Ki Gaya Qafila by Allama Iqbal in PDF.