ترا اندیشہ افلاکی نہیں ہے

طرح اندیشہ افلاکی نہیں ہے

تری پرواز لولاکی نہیں ہے

یہ مانا اصل شاہینی ہے تیری

تری آنکھوں میں بے باکی نہیں ہے

(277) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Tera Andesha Aflaki Nahin Hai In Urdu By Famous Poet Allama Iqbal. Tera Andesha Aflaki Nahin Hai is written by Allama Iqbal. Enjoy reading Tera Andesha Aflaki Nahin Hai Poem on Inspiration for Students, Youth, Girls and Boys by Allama Iqbal. Free Dowlonad Tera Andesha Aflaki Nahin Hai by Allama Iqbal in PDF.