نہ پوچھ جب سے ترا انتظار کتنا ہے

نہ پوچھ جب سے ترا انتظار کتنا ہے

کہ جن دنوں سے مجھے تیرا انتظار نہیں

ترا ہی عکس ہے ان اجنبی بہاروں میں

جو تیرے لب ترے بازو ترا کنار نہیں

(5002) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Na Puchh Jab Se Tera Intizar Kitna Hai In Urdu By Famous Poet Faiz Ahmad Faiz. Na Puchh Jab Se Tera Intizar Kitna Hai is written by Faiz Ahmad Faiz. Enjoy reading Na Puchh Jab Se Tera Intizar Kitna Hai Poem on Inspiration for Students, Youth, Girls and Boys by Faiz Ahmad Faiz. Free Dowlonad Na Puchh Jab Se Tera Intizar Kitna Hai by Faiz Ahmad Faiz in PDF.