دل میں ایسے ٹھہر گئے ہیں غم

دل میں ایسے ٹھہر گئے ہیں غم

دل میں ایسے ٹھہر گئے ہیں غم

جیسے جنگل میں شام کے سائے

جاتے جاتے سہم کے رک جائیں

مر کے دیکھیں اداس راہوں پر

کیسے بجھتے ہوئے اجالوں میں

دور تک دھول ہی دھول اڑتی ہے!

(1317) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Dil Mein Aise Thahar Gae Hain Gham In Urdu By Famous Poet Gulzar. Dil Mein Aise Thahar Gae Hain Gham is written by Gulzar. Enjoy reading Dil Mein Aise Thahar Gae Hain Gham Poem on Inspiration for Students, Youth, Girls and Boys by Gulzar. Free Dowlonad Dil Mein Aise Thahar Gae Hain Gham by Gulzar in PDF.