ثبات

آدمی بلبلہ ہے پانی کا

اور پانی کی بہتی سطح پر

ٹوٹتا بھی ہے، ڈوبتا بھی ہے

پھر ابھرتا ہے پھر سے بہتا ہے

نہ سمندر نگل سکا اس کو

نہ تواریخ توڑ پائی ہے

وقت کی موج پر سدا بہتا

آدمی بلبلہ ہے پانی کا

(249) ووٹ وصول ہوئے

Related Poetry

Your Thoughts and Comments

Sabaat In Urdu By Famous Poet Gulzar. Sabaat is written by Gulzar. Enjoy reading Sabaat Poem on Inspiration for Students, Youth, Girls and Boys by Gulzar. Free Dowlonad Sabaat by Gulzar in PDF.