وقت۔۲

وقت کی آنکھ پہ پٹی باندھ کے کھیل رہے تھے آنکھ مچولی

رات اور دن اور چاند اور میں

جانے کیسے کائنات میں اٹکا پاؤں

دور گرا جا کر میں جیسے

روشنی سے دھکا کھا کے، پرچھائیں زمیں پر گرتی ہے!

دھیا چھونے سے پہلے ہی

وقت نے چور کہا اور آنکھیں کھول کے مجھ کو پکڑ لیا!!

(586) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Waqt-2 In Urdu By Famous Poet Gulzar. Waqt-2 is written by Gulzar. Enjoy reading Waqt-2 Poem on Inspiration for Students, Youth, Girls and Boys by Gulzar. Free Dowlonad Waqt-2 by Gulzar in PDF.