یہ دنیا تم کو راس آئے تو کہنا

یہ دنیا تم کو راس آئے تو کہنا

نہ سر پتھر سے ٹکرائے تو کہنا

یہ گل کاغذ ہیں یہ زیور ہیں پیتل

سمجھ میں جب یہ آ جائے تو کہنا

بہت خوش ہو کہ اس نے کچھ کہا ہے

نہ کہہ کر وہ مکر جائے تو کہنا

بدل جاؤ گے تم غم سن کے میرے

کبھی دل غم سے گھبرائے تو کہنا

دھواں جو کچھ گھروں سے اٹھ رہا ہے

نہ پورے شہر پر چھائے تو کہنا

(227) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Ye Duniya Tumko Ras Aae To Kahna In Urdu By Famous Poet Javed Akhtar. Ye Duniya Tumko Ras Aae To Kahna is written by Javed Akhtar. Enjoy reading Ye Duniya Tumko Ras Aae To Kahna Poem on Inspiration for Students, Youth, Girls and Boys by Javed Akhtar. Free Dowlonad Ye Duniya Tumko Ras Aae To Kahna by Javed Akhtar in PDF.