(۳)

ساقی کوثر کے پیارے السلام

تشنہ لب سید ہمارے السلام

صبح تیرے قتل کی تھی صبح قیر

شام کے لوگوں کے مارے السلام

آسماں خم ہے تری تعظیم میں

تیرے ساجد ہیں ستارے السلام

تھے ہزاروں خصم جانی اس طرف

تم گئے بیکس بچارے السلام

فوج دشمن کی جو چڑھ آئی تمام

تم ہوئے ایک ایک اتارے السلام(۱)

بحر خوں میں غرق ہو چھوٹے بڑے

لگ گئے تم سب کنارے السلام

گور میں لاشیں تمھاری بے نماز

تم امام دیں تھے سارے السلام

راہ حق میں تجھ سے جانبازی ہوئی

بے خطر سر دینے ہارے السلام

کیا کہے اب میرؔ غم کش اس سوا

کاے ہمیشہ کے دکھارے السلام

(475) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

In Urdu By Famous Poet Mir Taqi Mir. is written by Mir Taqi Mir. Enjoy reading  Poem on Inspiration for Students, Youth, Girls and Boys by Mir Taqi Mir. Free Dowlonad  by Mir Taqi Mir in PDF.