واں طبیعت دم تقریر بگڑ جاتی ہے

واں طبیعت دم تقریر بگڑ جاتی ہے

بات کی بات میں توقیر بگڑ جاتی ہے

چونک پڑتا ہوں خوشی سے جو وہ آ جاتے ہیں

خواب میں خواب کی تعبیر بگڑ جاتی ہے

کچھ وہ پڑھنے میں الجھتے ہیں مرا نامۂ شوق

کچھ عبارت دم تحریر بگڑ جاتی ہے

چارہ گر کیا مری وحشت سے جنوں بھی ہے بتنگ

روز مجھ سے مری زنجیر بگڑ جاتی ہے

داغ الفت وہ بری شے ہے کہ کہنے سے ظہیرؔ

مہر و مہتاب کی تنویر بگڑ جاتی ہے

(615) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Wan Tabiat Dam-e-taqrir BigaD Jati Hai In Urdu By Famous Poet Zaheer Dehlvi. Wan Tabiat Dam-e-taqrir BigaD Jati Hai is written by Zaheer Dehlvi. Enjoy reading Wan Tabiat Dam-e-taqrir BigaD Jati Hai Poem on Inspiration for Students, Youth, Girls and Boys by Zaheer Dehlvi. Free Dowlonad Wan Tabiat Dam-e-taqrir BigaD Jati Hai by Zaheer Dehlvi in PDF.